لاہور- ڈونلڈ ٹرمپ کی دھمکیوں کی سخت الفاظ میں مذمت کرتےہیں- مجلس تحفظ ختم نبوت

6

لاہور(فلک نیوز )ٹرمپ افغانستان میں اپنی شکست اور ناکامی کی تمام تر ذمہ داری پاکستان پر ڈال کر خطہ میں بھارت کی بلا دستی قائم کرنے کیلئے پاکستان پر الزام تراشی کررہا ہیعالمی مجلس تحفظ ختم نبوت کے مرکزی سیکرٹری اطلاعات مولانا عزیزالرحمن ثانی ،قاری جمیل الرحمن اختر،مولانا سید ضیاء الحسن شاہ،مولانا قاری علیم الدین شاکر،مولانا عبدالنعیم ،قاری عبدالعزیز،مولانا سعید وقارنے امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ کی دھمکیوں کی سخت الفاظ میں مذمت کرتے ہوئے کہا کہ امریکہ پچھلے 16سالوں سے افغانستان میں جنگ لڑ رہا ہے اس کے تین صدراس جنگ میں حصہ لے چکے ہیں اس کے باوجود امریکہ کو مسلسل شکست کا سامنا ہے یہی وجہ ہے ٹرمپ افغانستان میں اپنی شکست اور ناکامی کی تمام تر ذمہ داری پاکستان پر ڈال کر خطہ میں بھارت کی بلا دستی قائم کرنے کیلئے پاکستان پر الزام تراشی کررہا ہے۔ امریکہ نے پاکستان کو دھشت گردی کی آگ میں جھونکاجس کی وجہ سے ملک و قوم کو شدید جانی و مالی نقصانات کا سامنا کرنا پڑا پاک فوج اور پاکستانی قوم نے لازوال قربانیاں دیں اور دھشت گردی کے خلاف جاری جنگ میں ملک و قوم کو شدید جانی و مالی نقصانات اٹھانے پڑے اتنی لازوال قربانیوں کے باوجودامریکہ پھر ہمیں دھمکیاں دے رہا ہے اور ہمارے ازلی دشمن بھارت کو تھپکی دے کرہمیں دیوار سے لگانے کی پالیسی پر عمل پیرا ہے دہشت گردی بہانہ سی پیک اصل نشانہ ہے۔ امریکہ کو نو مور کہنے کا وقت آ گیا ہے۔ امریکہ کی سامراجی پالیسیاں دنیا میں بدامنی کا سبب ہیں۔ پاکستان کی بہادر قوم امریکہ کی پاکستان دشمن سازشوں کی مزاحمت کے لئے پر عزم ہے۔ حکومت پارلیمنٹ کا مشترکہ اجلاس بلا کر امریکی دھمکیوں پر قومی پالیسی تیار کرے۔ علماء نے مزید کہا ہے کہ حکومت اور اپوزیشن ملکی سلامتی کے تحفظ کے لئے متحد ہو جائے۔ یہ وقت آپس میں لڑنے نہیں بلکہ متحد ہو کر پاکستان دشمنوں سے لڑنے کا ہے۔ پاکستان دہشت گردی کے خلاف جنگ میں ستر ہزار جانوں کی قربانی دے چکا ہے۔ اس کے باوجود پاکستان کی قربانیوں کا اعتراف نہ کرنا امن دشمن رویہ ہے۔ پاکستانی حکومت قومی امنگوں کے مطابق مستحکم خارجہ پالیسی تیار کرے۔ بھارت کو خطے کا چوہدری بنانے کا امریکی خواب پورا نہیں ہو گا۔