لاہور کا معرکہ کون جیتے گا، فیصلہ کل ہوجائیگا، پولنگ کی تیاریاں مکمل

6

سکیورٹی کے لیے فوجی دستے حلقے میں پہنچ گئے ہیں، پاک فوج اور رینجرز کے جوان پولنگ سٹیشنز کے اندر اور باہر ڈیوٹی دیں گے۔

لاہور: (فلک نیوز) لاہور کا معرکہ کون جیتے گا، فیصلہ کل ہوجائے گا۔ پولنگ کے لئے تمام تیاریاں مکمل کرلی گئیں، بائیومیٹرک مشینیں اور انتخابی سامان کی ترسیل کا عمل بھی شروع ہو گیا۔ سیکیورٹی کے لیے فوجی دستے حلقے میں پہنچ گئے ہیں۔ پاک فوج اور رینجرز کے جوان پولنگ سٹیشنز کے اندر اور باہر ڈیوٹی دیں گے۔ تمام پولنگ سٹیشنز کو حساس قرار دیا گیا ہے۔ قومی اسمبلی کے حلقہ این اے 120 میں ضمنی الیکشن میں ووٹ کل ڈالے جائیں گے۔ مسلم لیگ (ن) کی کلثوم نواز، تحریک انصاف کی یاسمین راشد اور پیپلز پارٹی کے فیصل میر آمنے سامنے ہوں گے۔پاکستان میں پہلی بار یہ الیکشن بائیو میٹرک سسٹم کے تحت ہو رہا ہے۔ 100 بائیو میٹرک مشینیں حلقے میں پہنچا دی گئی ہیں، جو تجرباتی طور پر 39 پولنگ سٹیشنوں پر استعمال کی جائیں گی۔ حلقے میں کل 220 پولنگ سٹیشن ہیں۔ ہر پولنگ سٹیشن پر سی سی ٹی وی کیمرے نصب ہوں گے۔ 2013 کے انتخابات میں سابق وزیر اعظم نواز شریف نے 91 ہزار 683 ووٹ حاصل کئے، پاکستان تحریک انصاف کی ڈاکٹر یاسمین راشد 52 ہزار 354 ووٹ حاصل کئے۔ مجموعی طور کل رجسٹرڈ ووٹرز کی تعداد 3 لاکھ 21 ہزار 786 بنتی ہے۔ ن لیگ کا قلعہ سمجھے جانے والے حلقہ این اے 120 میں مرد ووٹرز کی تعداد 1 لاکھ 79 ہزار 642 اور خواتین ووٹرز کی تعداد 1 لاکھ 42ہزار 144 ہے۔2017 کے ضمنی انتخابات کے لیے کل 220 پولنگ سٹیشن بنائےجا رہے ہیں۔ جن میں مردوں کے لئے 103 اور خواتین ووٹرز کے لئے 98، جبکہ 19 پولنگ سٹیشن مردوں اور عورتوں کے لئے مشترکہ ہوں گے۔