کرد آزادی چھوڑ دیں یا پھر بھوکے رہیں، ترک صدر طیب اردوان

8

کرد صدر مسعود بارزانی کو اب اپنی مہم جوئی بند کردینی چاہیے ،ترک صدرکی گفتگو

انقرہ – ترکی کے صدر رجب طیب اردوان نے کہا ہے کہ پیر کو ہونے والے آزادی کے ریفرنڈم کے بعد ان کی تعزیری کارروائیوں کے نتیجے میں عراقی کرد بھوکے رہنے پر مجبور ہو سکتے ہیں۔ غیر ملکی خبررساں ادارے کے مطابق انہوں نے بین الاقوامی مخالفت کے باوجود ریفرنڈم منعقد کرانے پر کردوں کی تنظیم کے آر جی کے سربراہ مسعود بارزانی پر غداری کا الزام عائد کیاہے ۔ انہوں نے کہا ہے کہ مسعود بارزانی کو اب اپنی مہم جوئی ترک کر دینی چاہیے ۔ طیب اردوان نے کہا کہ انہیں آخری لمحے تک امید تھی کہ کرد رہنما مسعود بارزانی ریفرنڈم کو ملتوی کر دیں گے ۔ریفرنڈم کا فیصلہ جو بغیر کسی کے مشورے سے کیا گیا ہے غداری ہے ۔ اگر بارزانی اور کے آر جی جلد از جلد اس غلطی کا ازالہ نہیں کرتے تو تاریخ میں ان کا نام علاقے کو نسلی اور فرقہ وارانہ تشدد میں گھسیٹنے والوں میں آئے گا۔اردوان نے کہا کہ ترکی بارزانی کی حکومت پر پابندیاں لگا سکتا ہے ۔ یہ سب ختم ہو جائے گا اگر ہم تیل کے نلکے بند کر دیں تو ان کی آمدن غائب ہو جائے گی اور اگر ہمارے ٹرک شمالی عراق جانا بند کر دیں تو انہیں خوراک نہیں ملے گی۔