فوج سمیت مختلف عہدوں پر فائز احمدی ہٹائے جائیں، کیپٹن صفدر

7

سابق وزیراعظم نوازشریف کے داماد اور رکن قومی اسمبلی کیپٹن ریٹائرڈ محمد صفدر نے افواجِ پاکستان میں احمدیوں کی بھرتی پر پابندی کیلیے قرارداد لانے کا اعلان کیاہے۔

بی بی سی کے مطابق قومی اسمبلی کے اجلاس میں اپنے خطاب میں انھوں نے کہاکہ پاکستان میں فوج سمیت کسی بھی محکمے میں اعلیٰ عہدوں میں بیٹھے ہوئے احمدی ملک کیلیے خطرہ ہیں اس لیے اْنھیں فوری طور پرعہدوں سے ہٹادینا چاہیے۔

کیپٹن رٹائرڈ صفدرنے کہاکہ احمدی ملک کیلیے زہرقاتل ہیں۔ انھوں نے کہاکہ ختم نبوت کاحلف عدلیہ سمیت22ویں گریڈ کے افسر پر بھی لاگو کیا جائے۔ انھوں نے عدلیہ میں بیٹھے لوگوں سے ختم نبوت سرٹیفکیٹ پر دستخط لینے کامطالبہ کیااور کہاکہ انصاف کی کرسی پر کسی بھی ایسے شخص کو نہیں بٹھاناچاہیے جس کاتعلق احمدی برادری سے ہو۔

رہنما ن لیگ نے یہ بھی مطالبہ کیا کہ سیاسی جماعتیں بھی ٹکٹ دیتے ہوئے اپنے امیدواروں سے ختم نبوت کے سرٹیفکیٹ پر حلف لیں۔انہوں نے کہا کہ 12 اکتوبر کا انقلاب فوجی انقلاب نہیں بلکہ قاد یانیوں کاانقلاب تھاکیوں کہ مشرف کا سسرال قادیانی ہے۔

علاوہ ازیں قومی اسمبلی نے انسانی اعضاء اور عضلات کی پیوند کاری (ترمیمی) بل 2017 کی متفقہ طور پر منظوری دیدی،بل کے تحت نادراقومی شناختی کارڈ جاری کرتے ہوئے اپنے درخواست فارم کے صفحہ اول پر فرد کی حادثاتی یادماغی موت کی صورت میں کسی عضو یاعضلات کاعطیہ کرنے کی منشا کے حصول کیلیے پوچھاجاسکے گا۔