آج سال کی طویل ترین رات ہوگی، لیکن کیوں؟

55

آج یعنی 21 اور 22 دسمبر کی درمیانی رات پورے سال کی طویل ترین رات ہوگی جبکہ کل کا دن سارے سال کا سب سے مختصر دن ہوگا۔

فلکیاتی اداروں کے مطابق آج رات زمین کے شمالی نصف کرے (Northern Hemisphere) میں سال کی طویل ترین رات ہوگی اور کل سال کا مختصر ترین دن ہوگا؛ جبکہ جنوبی نصف کرے (Southern Hemisphere) میں سال کی مختصر ترین رات اور طویل ترین دن ہوگا۔ یہ موقعہ ہر سال دسمبر کے مہینے میں آتا ہے اور اس کی تاریخیں 20 سے 23 دسمبر تک کسی بھی دن ہوسکتی ہیں۔ اس سال یہ موقعہ آج رات (21 دسمبر کی رات) آرہا ہے۔

واضح رہے کہ وہ موقعہ جب شمالی نصف کرے میں سال کی طویل ترین رات ہو، اسے فلکیات کی زبان میں ’’انقلابِ سرما‘‘ (winter solstice) یا ’’انقلابِ شمالی‘‘ (Northern solstice) بھی کہا جاتا ہے۔ البتہ اس حوالے سے ایک عام غلط فہمی یہ پائی جاتی ہے کہ انقلابِ سرما کے موقعے پر زمین کا سورج سے فاصلہ سب سے زیادہ ہوتا ہے؛ ایسا نہیں ہوتا۔  اس کے برعکس، حقیقت یہ ہے کہ زمین اپنے محور پر 23.4 درجے جھکی ہوئی ہے جبکہ محوری گردش (axial rotation) کے دوران زمین کا اپنا محور بھی کسی گھومتے ہوئے لٹو کی مانند لڑکھڑاتا رہتا ہے۔ سورج کے گرد چکر لگاتے لگاتے سال میں ایک موقعہ ایسا آتا ہے جب شمال کی جانب زمینی محور کا انتہائی جھکاؤ سورج سے مخالف سمت میں ہوجاتا ہے۔ لیکن چونکہ زمین کی محوری گردش مسلسل جاری رہنے والا عمل ہے اس لیے یہ موقعہ آنے کے فوراً بعد ہی زمینی محور کا جھکاؤ واپس پلٹنے لگتا ہے یعنی زمین کے شمالی نصف کرے کا جھکاؤ ایک بار پھر سورج کی سمت ہونے لگتا ہے۔ نتیجتاً انقلابِ سرما کے فوراً بعد راتیں چھوٹی اور دن طویل ہونے لگتے ہیں۔

انقلابِ سرما کا یہ موقعہ آج رات پاکستانی معیاری وقت کے مطابق رات 9 بج کر 28 منٹ پر آئے گا۔

آج اسلام آباد میں سال کی طویل ترین رات کا دورانیہ 14 گھنٹے 5 منٹ، لاہور میں 13 گھنٹے 55 منٹ جبکہ کراچی میں 13 گھنٹے 25 منٹ ہوگا۔