ٹرمپ کے بیان پر بہت افسوس ہوا، ہمیں امریکی امداد نہیں چاہیئے: شہباز شریف

18

طعنے اور زہر آلود تیر برسائے جانا لمحہ فکریہ ہے، شرمندہ کئے جانے والی امداد اور بھیک سے چھٹکارا حاصل کرلیں: وزیراعلیٰ پنجاب کا لاہور میں خطاب

لاہور: (فلک نیوز) شہباز شریف کا کہنا ہے ٹرمپ کے بیان پر بہت افسوس ہوا، امریکی صدر کا بیان قومی وقار کے منافی ہے۔ انہوں نے کہا ہمیں امریکی صدر کے بیان پر سوچ سمجھ کر قوت ارادری اور دلیری کے ساتھ جواب دینا ہے۔

وزیراعلیٰ پنجاب میاں شہباز شریف نے تقریب سے خطاب کرتے ہوئے کہا ہم نے خود کو عملی طور پر بھی تیار کرنا ہے، عزت اور وقار کی زندگی بسر کرنے والی قومیں اچھی زندگی گزار سکتی ہیں، کشکول اور مانگے تانگے سے زندگی میں عزت نہیں ملتی۔ انہوں نے کہا تمام اسٹیک ہولڈرز ملکر فیصلہ کریں اور امریکی امداد سے چھٹکارہ حاصل کر لیں، ہمیں طعنے دیئے جائیں اور زہر آلود تیر برسائے جائیں تو یہ لمحہ فکریہ ہے۔

شہباز شریف نے مزید کہا ڈالرز اور پاؤنڈز کے فیصلے اشرافیہ کرتی ہے، ہمیں اپنے آپ اور موجودہ نظام سے جنگ کرنی ہے۔ انہوں نے کہا مجھے طعنے دیئے جاتے تھے کہ شہباز شریف چین کا سفارتکار بنا ہے، پاکستان کو دھمکی دی گئی تو چین ہمارے ساتھ کھڑا تھا، ہمیں امریکی امداد نہیں چاہیئے۔ ان کا کہنا تھا امریکا سے کہا جائے جو پیسے دیئے اس کا حساب لے لیں، ہمیں کسی سے نہیں اپنے آپ اور اس نظام سے جنگ کرنی ہے، کوئی سیاسی دکان نہیں چمکا رہا دل کی باتیں کر رہا ہوں۔

قبل ازیں وزیراعلیٰ پنجاب شہباز شریف سے مختلف اضلاع سے تعلق رکھنے والے اراکین پنجاب اسمبلی نے ملاقات کی۔ اس موقع پر گفتگو کرتے ہوئے شہباز شریف نے کہا ہم نے عوامی خدمت اور ایک سیاسی جماعت کے قائد نے الزام تراشی میں نام بنایا، ترقی مخالف سیاسی عناصر کو عوام کی عدالت میں جواب دینا پڑے گا۔ انہوں نے کہا سیاست عوام کی خدمت کا نام ہے اور خدمت جذبے سے ہوتی ہے، مسلم لیگ (ن) کی قیادت کا جینا مرنا عوام کے ساتھ ہے۔ وزیراعلیٰ کا کہنا تھا کہ عوام کو سہولتوں کی فراہمی کے منصوبوں کی مخالفت ایسے عناصرکوبہت مہنگی پڑے گی۔