طاہرالقادری کی احتجاجی تحریک میں ان کے ساتھ کھڑے ہوں گے، عمران خان

19

چیئرمین تحریک انصاف عمران خان کا کہنا ہے کہ طاہرالقادری موجودہ نظام کے خلاف 17 جنوری کو ملک گیر تحریک شروع کررہے ہیں ہم ان کے ساتھ کھڑے ہوں گے۔

اسلام آباد میں میڈیا سے بات کرتے ہوئے چیئرمین تحریک انصاف عمران خان کا کہنا تھا کہ قصور سانحے پر پوری قوم کو تکلیف میں دیکھا ہے اور جب ماں باپ نے اپنی بچی کی تصویر دیکھی ہوگی تو ان پر کیا گزری ہوگی، بدقسمتی سے ہمارے ملک میں بچیوں کے تحفظ کا کوئی قانون ہی موجود نہیں۔ عمران خان کا کہنا تھا کہ پنجاب پولیس کو خود حکومتِ پنجاب نے خراب کررکھا ہے، پنجاب پولیس میں بھرتیوں کے لئے رائیونڈ  سے حکم آتا ہے اور پھر یہی پولیس والے قانون کے بجائے نوازشریف کا حکم مانتے ہیں، وزیراعلیٰ پنجاب کبھی پولیس کی یونیفارم تبدیل کردیتے ہیں اور جب سانحہ ماڈل ٹاؤن اور قصور کی طرح کے واقعات و سانحات رونما ہوجاتے ہیں تو شہبازشریف ڈرامے بازی کرتے ہوئے لوگوں کو معطل کردیتے ہیں۔ اب عوام کا اعتماد پولیس اور گورنمنٹ سے اٹھ چکا ہے کیوں کہ لوگوں کو انصاف نہیں مل رہا اور جب عوام کو انصاف نہ ملے تو پھر وہ تشدد کر راستہ اختیار کرلیتے ہیں جس کی ذمہ داری ریاست پر عائد ہوتی ہے۔

چیئرمین پی ٹی آئی نے کہا کہ طاہرالقادری موجودہ نظام کے خلاف 17 جنوری کو ملک گیر تحریک شروع کررہے ہیں ہم ان کے ساتھ کھڑے ہوں گے، چیف جسٹس سے بھی اپیل کرتا ہوں کہ سانحہ ماڈل ٹاؤن کا ازخود نوٹس لیں جب کہ رائل فیملی کی سیکیورٹی پر سالانہ 7 ارب روپے کے اخراجات کا بھی نوٹس لیا جائے۔