سعودی عرب نے اسرائیل کے لیے فضائی حدود باضابطہ طور پر کھول دیں

21

سعودی عرب نے اسرائیل کے لیے اپنی فضائی حدود کھول دی ہیں جس کے تحت پہلی پرواز بھارت سے براستہ ریاض تل ابیب پہنچ گئی۔

بین الااقوامی خبر رساں ادارے کے مطابق سعودی عرب کی جانب سے اسرائیل کے فضائی حدود کھول دینے کے بعد بھارتی فضائی کمپنی ایئرانڈیا کی پرواز اے آئی 139 دہلی سے براستہ سعودی عرب تل ابیب کے بن گوريون ایئرپورٹ پر پہنچ گئی جس کے بعد سعودی عرب کی جانب سے اسرائیل پر فضائی حدود کی 70 سالہ پابندی کا خاتمہ ہو گیا ہے۔

اسرائیلی وزیر برائے ٹرانسپورٹ يسرائيل كاٹس نے بین الااقوامی خبر رساں ایجنسی سے بات کرتے ہوئے کہنا تھا کہ یہ ایک تاریخی لمحہ ہے جس کے لیے ہم نے برسوں محنت کی ہے۔ سعودی فضائی حدود کا اسرائیل کے کھلنے سے اسرائیل تا بھارت سفر مختصر اور کم خرچ ہو جائے گا اور یہ اسرائیل اور سعودی عرب کے درمیان پہلا باضابطہ تعلق بھی ثابت ہو گا۔

بین الااقوامی خبر رساں ادارے رائٹر کے مطابق سعودی عرب کی جانب سے اسرائیل کے لیے فضائی حدود پر پابندی اُٹھانے سے متعلق تصدیق یا تردید نہیں ہے اور نہ ہی یہ واضح ہو سکا ہے کہ فضائی حدود پر پابندی اُٹھانے کا اطلاق کسی اسرائیلی ایئرلائن پر بھی ہوگا یا نہیں۔

واضح رہے کہ سعودی عرب اسرائیل کو تسلیم نہیں کرتا اور دونوں کے درمیان نا تو سفارتی تعلقات قائم ہیں اور نا ہی اب تک کوئی فضائی رابطہ رہا ہے۔