ناروے۔منہاج سکول اوسلو میں سالانہ تقسیم انعامات و اسناد کی پروقار تقریب کا انعقاد

32
اوسلو(عامر بٹ)منہاج سکول اوسلو نے تعلیمی نظام میں تربیت کے پہلو کو مدنظر رکھتے ہوئے موثر، منفرد اور مثبت اقدامات اٹھائے ہیں جن کو مقامی لوگوں کی طرف سے خوب سراہا جاتا ہے اور منہاج القرآن کی پہچان علم اور اردو ادب کے فروغ کے حوالے سے کی جاتی ہے ، یہی وجہ ہے کہ منہاج سکول میں تقریباََ 300 کے قریب طلباء و طالبات زیرتعلیم ہیں۔تقریب کا آغاز تلاوت قرآن سے اور نعت رسول ﷺ سے کیا گیا۔طلباء و طالبات نے تلاوت، نعت رسول ﷺ اور تقاریر پیش کیں اور حاضرین سے خوب داد وصول کی۔امتحانات میں نمایاں پوزیشن اور دیگرنصابی سرگرمیوں میں حصہ لینے والے بچوں میں انعامات تقسیم کیے گے۔ منہاج القرآن انٹرنیشنل ناروے کے امام و خطیب علامہ اقبال فانی نے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ منہاج سکول کا مقصد بچوں کو دینی تعلیم سے روشناس کرانااور حضورنبی کریم ﷺ سے محبت و ادب کاتعلق پیدا کرنا ہے۔ اوسلو سٹی کونسل کے ممبر ڈاکٹر مبشر بنارس نے خطاب کرتے ہوئے منہاج سکول کے نظم و ضبط کو خوب سراہااور کہا کہ ڈاکٹر طاہرالقادری کی شخصیت علم کے حوالے سے پہچان رکھتی ہے اور یہ دیکھ کر انہیں خوشی محسوس ہو رہی ہے کہ علم دوستی کے فروغ میں منہاج القرآن اوسلو کا ناروے میں اہم کردار ہے۔ منہاج سکول کے پرنسپل راشد اعوان اور والدین کمیٹی کے سربراہ شاہدتنویر بٹ نے اظہار خیال کرتے ہوئے مہمانان گرامی، والدین، اساتذہ اور خصوصی طور پر طلباء کا بے حد شکریہ ادا کیا جن کی مدد اور محنت سے اس خوبصورت تقریب کا انعقاد عمل میں آیا۔ تقریب کی نقابت کے فرائض ثمرہ احسن اور سجیلہ اصغرنے احسن انداز میں سر انجام دئیے۔