الیکشن سے پہلے ہی مبینہ طور پر دھاندلی شروع

38

سیہون ( فلک نیوز) عام انتخابات2018 میں مبینہ دھاندلی کا پہلا واقعہ سامنے آگیا ، مراد علی شاہ کے حلقے میں پوسٹل بیلٹ کے غیر قانونی استعمال کی ویڈیو سامنے لے آیا ، انتخابی عملے کے نام پر جاری پوسٹل بیلٹ کے لفافے کھلے ہوئے ملے،پی پی امیدوار کے قریبی رشتے دار پوسٹل بیلٹ استعمال کرتے پائے گئے۔

ملکی تاریخ کے سب سے بڑے عام انتخابات میں مبینہ انتخابی دھاندلی کا واقعہ سامنے آگیا ، پوسٹل بیلٹ پر من پسند جیالے امیدوار کے نام لکھنے کی ویڈیو سامنے آگئی ۔

انتخابی عملے کے نام پر جاری پوسٹل بیلٹ کے لفافے کھلے ہوئے ملے ، پی پی امیدوار کے قریبی رشتے دار عزیز راہو پوٹو پوسٹل بیلٹ استعمال کرتے پائے گئے۔

پی پی مخالف امیدواروں نے مبینہ انتخابی دھاندلی پر شور مچادیا، الزام لگایا کہ چار ہزار پوسٹل بیلٹ مراد علی شاہ اور سکندر راہو پوٹو کیلئے استعمال کیے گئے۔

قواعد کے تحت ریٹرننگ افسر کی جانب سے جاری پوسٹل بیلٹ انتخابی عملہ ہی استعمال کرسکتا ہے مگر سیہون میں محکمہ تعلیم کے دفتر میں پوسٹل بیلٹ کے لفافے کھول کر من پسند امیدوار کے نام لکھے گئے۔

سابق وزیراعلیٰ مرادعلی شاہ کے حلقہ انتخاب میں پوسٹل بیلٹ کے ذریعے مبینہ دھاندلی کے واقعے پر الیکشن کمیشن تحقیقات کررہا ہے، مختلف جماعتوں کے امیدوار اور کارکنان احتجاج پر جبکہ پولیس اور ریٹرننگ افسران بھی شکایات کا جائزہ لے رہے ہیں۔