کارکنوں کی بے وفائی اور جیل حالات سے پریشان نوازشریف نے این آراو کیلئے کوششیں تیزکردیں۔ ذرائع

18

راولپنڈی ( فلک نیوز) محلات میں زندگی بسر کرنے والے نوازشریف جیل میں چند دن گزار کر ہی پریشان ہوگئے ، سابق وزیراعظم نے قید سے آزادی حاصل کرنے کیلئے ایک اور این آر او کیلئے کوششیں تیز کردیں ،  ذرائع کے مطابق صدر مملکت اور دو گورنرز این آر او کے لئے سرگرم ہوگئے۔

جیل کی چند روزہ زندگی نے ہی چھٹی کا دودھ یاد کرادیا ، محلات میں عیش وعشرت کی زندگی بسر کرنے والے نوازشریف نے بیماری کا بہانہ چل پانے پر این آر او کیلئے ہاتھ پاؤں مارنا شروع کردیئے ، اسیری نے ’’ووٹ کو عزت دو‘‘ کا بیانیہ بھی بھلا دیا ۔

ذرائع کے مطابق سابق وزیراعظم کو ووٹرز کی بجائے اپنی جان کے لالے پڑ گئے ، پارٹی کی اعلیٰ قیادت نے نوازشریف کو لندن سے واپسی پر استقبال کیلئے ایئرپورٹ پر لاکھوں کا مجمع لانے کی یقین دہانی کرائی تھی لیکن ایئرپورٹ پر تو کوئی کارکن نظر تک نہ آیا ۔

ذرائع کا کہنا ہے کہ نوازشریف کا یہ بھی خیال تھا کہ جیل کے باہر روزانہ ہزاروں کی تعداد میں کارکن ان کی قید کےخلاف احتجاج کریں گے ،لیکن ان کا یہ خیال بھی خیال ہی رہ گیا ، جس پر انہوں نے بھی قید سے خلاصی کیلئے ہاتھ پاؤں مارنا شروع کردیئے ۔

ذرائع کے مطابق صدر مملکت اور دو گونرز سابق وزیراعظم نوازشریف کو این آر او دلانے کیلئے سرگرم ہوگئے ہیں ، ذرائع کا کہنا ہےکہ نوازشریف سے ملاقات کرنے والے گورنز کے خلاف کارروائی بھی ہوسکتی ہے ۔

دوسری طرف نوازشریف کی میڈیکل رپورٹ 92 نیوز نے حاصل کرلی ، رپورٹ کے مطابق نوازشریف کے سینے میں کوئی مسئلہ نہیں، میڈیکل رپورٹ آئی جی جیل خانہ جات کو ارسال کردی گئی ہے۔