برطانیہ میں اتوارکوعیدکااعلان کرنے والے روزے کی قضاء اداکریں،علامہ سجاد

7

 

ناٹنگھم (پ ر )الفیض ٹرسٹ کے چئرمین اور اسلامک سنٹر نوٹنگھم کے خطیب علامہ محمد سجاد رضوی نے عید کے حوالے سے پیدا ہونے والی اضطرابی کیفیت پہ اپنے خیالات کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ چند مذہبی لوگوں نے غلط فیصلے کی وجہ سے امت کی اجتماعیت کو تار تار کیا۔ لندن کے ایک امام ہفتہ بھر قبل ہی اتوار کی عید کا پوسٹر شائع کر چکے تھے مگر جب انگلینڈ کی آبزرویٹری کے ساتھ ساتھ سائوتھ افریقہ اور مراکو سے بھی چاند نظر نہیں آیا تو بجائے غلطی تسلیم کرنے کے نائجیریا سے چاند نکال لائے جیسے کہ پاکستان میں مسٹر پوپلزئی من پسند ہلال نکالتا ہے۔ حقیقت یہ ہے کہ ان لوگوں کا پہلے سے ہی ایکا تھا اور ذاتی مفادات بشمول چندہ اس فتنہ کے محرکات ثابت ہوئے۔ مزید تعجب کی بات یہ ہے کہ ایک مذہبی چینل پہ اتور کا اعلان کرنے والے نہ صرف ماضی میں سائوتھ افریقہ میں چاند کی رویت تسلیم کئے جانے کا معاہدہ نہ صرف سائن کرچکے تھے بلکہ کچھ کی اپنی مساجد میں سوموار کو عید ہوئی مگر امام صاحب اتوار کا اعلان کرتے رہے۔ علامہ رضوی کاکہنا تھا کہ سماجی سطح پہ اس کے از حد تشویش ناک نتائج سامنے آئے ہیں عوام کا غیظ و غضب عروج پررہا اور جس طرح ماہ رمضان کی حرمت پامال کی گئی اور مشکوک گواہی پہ چاند کا اعلان ہوا اس سے دینی حلقوں پہ عوام کی طرف نہ صرف شدید تنقید سامنے آئی بلکہ گالی گلوچ تک کی ویڈیوز بھی سوشل میڈیا پہ وائرل ہوئیں۔ جس سے اس فیصلے کی مقبولیت کا اندازہ کیا جا سکتا ہے۔ اتوار کو عید کا اعلان کرنے والے رب تعالی سے معافی مانگیں اور ایک روزے کی قضا کریں۔ جس قدر شدید رد عمل اس فیصلہ پہ دیکھنے میں آیا اس کی مثال نہیں ملتی۔ علما سے گذارش ہے کہ توڑنے کی بجائے جوڑنے کا فریضہ سرانجام دیں۔